اُن کے اندازِ کرم ، اُن پہ وہ آنا دل کا ہائے وہ وقت

اُن کے اندازِ کرم ، اُن پہ وہ آنا دل کا ہائے وہ وقت

اُن کے اندازِ کرم ، اُن پہ وہ آنا دل کا ہائے وہ وقت ،

وہ باتیں ، وہ زمانہ دل کا نہ سُنا اُس نے توّجہ سے

نہ سُنا اُس نے توّجہ سے فسانہ دل کا

زندگی گزری ، مگر درد نہ جانا دل کا

کچھ نئی بات نہیں حُسن پہ آنا دل کا

مشغلہ ہے یہ نہایت ہی پرانا دل کا

وہ محبت کی شروعات ، وہ بے تھا خوشی

دیکھ کر اُن کو وہ پھولے نہ سمانا دل کا

دل لگی ، دل کی لگی بن کے مٹا دیتی ہے

روگ دُشمن کو بھی یا رب ! نہ لگانا دل کا

ایک تو میرے مقدر کو بگاڑا اِس نے

اور پھر اُس پہ غضب ہنس کے بنانا دل کا

میرے پہلو میں نہیں آپ کی مُٹّھی میں نہیں

بے ٹھکانے ہے بہت دن سے ، ٹھکانہ دل کا

وہ بھی اپنے نہ ہوئے، دل بھی گیا ہاتھوں سے

ایسے آنے سے بہتر تو تھا نہ آنا دل کا

خوب ہیں آپ بہت خوب ، مگر یاد رہے

زیب دیتا نہیں ایسوں کو ستانا دل کا

بے جھجک آ کے ملو ، ہنس کے ملاؤ آنکھیں

آؤ ہم تم کو سکھاتے ہیں مِلانا دل کا

حسرتیں خاک ہوئیں مٹ گئے ارمان سارے

لُٹ گیا کُوچۂ جاناں میں خزانہ دل کا

لے چلا ہے مرے پہلو سے بصد شوق کوئی

اب تو ممکن ہی نہیں لَوٹ کے آنا دل کا

اُن کی محفل میں نصیرؔ اُن کے تبسُم کی قسم

دیکھتے رہ گئے ہم ، ہاتھ سے جانا دل کا

Leave a Reply

Terms of Services

Contact Us

Contact Email: admin@haledil.com
Phone:+92-3060949548 Name HALEDIL.COM

Lahore Punjab.
Pakistan